یہ وادیاں یہ فضائیں بلا رہی ہیں تمہیں

ساحر لدھیانوی

یہ وادیاں یہ فضائیں بلا رہی ہیں تمہیں

ساحر لدھیانوی

MORE BYساحر لدھیانوی

    یہ وادیاں یہ فضائیں بلا رہی ہیں تمہیں

    خموشیوں کی صدائیں بلا رہی ہیں تمہیں

    ترس رہے ہیں جواں پھول ہونٹ چھونے کو

    مچل مچل کے ہوائیں بلا رہی ہیں تمہیں

    تمہاری زلفوں سے خوشبو کی بھیک لینے کو

    جھکی جھکی سی گھٹائیں بلا رہی ہیں تمہیں

    حسین چمپئی پیروں کو جب سے دیکھا ہے

    ندی کی مست ادائیں بلا رہی ہیں تمہیں

    مرا کہا نہ سنو ان کی بات تو سن لو

    ہر ایک دل کی دعائیں بلا رہی ہیں تمہیں

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    محمد رفیع

    محمد رفیع

    مآخذ
    • کتاب : Kulliyat-e-Sahir Ludhianvi (Pg. 400)
    • Author : SAHIR LUDHIANVI
    • مطبع : Farid Book Depot (Pvt.) Ltd

    موضوعات:

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY