ذرا محتاط ہونا چاہیے تھا

فہمی بدایونی

ذرا محتاط ہونا چاہیے تھا

فہمی بدایونی

MORE BY فہمی بدایونی

    ذرا محتاط ہونا چاہیے تھا

    بغیر اشکوں کے رونا چاہیے تھا

    اب ان کو یاد کر کے رو رہے ہیں

    بچھڑتے وقت رونا چاہیے تھا

    مری وعدہ خلافی پر وہ چپ ہے

    اسے ناراض ہونا چاہیے تھا

    چلا آتا یقیناً خواب میں وہ

    ہمیں کل رات سونا چاہیے تھا

    سوئی دھاگہ محبت نے دیا تھا

    تو کچھ سینہ پرونا چاہیے تھا

    ہمارا حال تم بھی پوچھتے ہو

    تمہیں معلوم ہونا چاہیے تھا

    وفا مجبور تم کو کر رہی تھی

    تو پھر مجبور ہونا چاہیے تھا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY