زندگی بھر جنہوں نے دیکھے خواب

عابد مناوری

زندگی بھر جنہوں نے دیکھے خواب

عابد مناوری

MORE BYعابد مناوری

    زندگی بھر جنہوں نے دیکھے خواب

    ان کو بخشے گئے ہیں پھر سے خواب

    دن اندھیرا دکھائی دیتا ہے

    رات دیکھے تھے جگمگاتے خواب

    اس نے ایسے بھلا دیا ہے مجھے

    یاد رہتے نہیں ہیں جیسے خواب

    رات کی بخششیں تو تھیں مجھ پر

    روز روشن نے بھی دکھائے خواب

    جن کی تعبیر ہی نہیں کوئی

    میں نے دیکھے ہیں اکثر ایسے خواب

    دل کا ہر زخم ہو گیا تازہ

    آ گئے یاد بھولے بسرے خواب

    عشق کی یہ علامتیں تو نہیں

    دل ہے بے چین آنکھ ہے بے خواب

    مشغلہ ہے مرا یہ اے عابدؔ

    دیکھنا نت نئے سنہرے خواب

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY