زندگی گو کشتۂ آلام ہے

آنند نرائن ملا

زندگی گو کشتۂ آلام ہے

آنند نرائن ملا

MORE BY آنند نرائن ملا

    زندگی گو کشتۂ آلام ہے

    پھر بھی راحت کی امید خام ہے

    ہاں ابھی تیری محبت خام ہے

    تیرے دل میں کاوش انجام ہے

    عشق ہے میں ہوں دل ناکام ہے

    اس کے آگے بس خدا کا نام ہے

    آ کہاں ہے تو فریب آرزو

    آج ناکامی سے لینا کام ہے

    میں وہی ہوں دل وہی ارماں وہی

    ایک دھوکا گردش ایام ہے

    اپنے جی میں یہ کہ دنیا چھوڑ دیں

    اور دنیا کو ہمیں سے کام ہے

    جل چکے چشم اعزا میں چراغ

    سو بھی جا ملاؔ کہ وقت شام ہے

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    زندگی گو کشتۂ آلام ہے نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY