اپنے جوتوں کی حفاظت

مرزا غالب

اپنے جوتوں کی حفاظت

مرزا غالب

MORE BYمرزا غالب

    ایک دن جبکہ آفتاب غروب ہورہا تھا ، سید سردار مرزا، مرزا غالبؔ سے ملنے کو آئے ۔ جب تھوڑی دیر کے بعد وہ جانے لگے تو مرزا صاحب خود شمع لے کر فرش کے کنارے تک آئے تاکہ سید صاحب اپنا جوتا روشنی میں دیکھ کر پہن لیں۔ انہوں نے کہا ’’قبلہ! آپ نے کیوں تکلیف فرمائی؟ میں جوتا خود ہی پہن لیتا۔‘‘ مرزا صاحب بولے:’’میں آپ کا جوتا دکھانے کو شمع نہیں لیا،بلکہ اس لیے لا یا ہوں کہ کہیں آپ میرا جوتا نہ پہن جائیں۔‘‘

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY