کنور کی دو آنکھیں

بشیر بدر

کنور کی دو آنکھیں

بشیر بدر

MORE BYبشیر بدر

    نینی تال کلب میں مشاعرہ ہورہاتھا اور نظامت کررہے تھے جناب کنور مہندر سنگھ بیدی سحر۔ مشاعرے کے اختتام پر جب بشیر بدر اور وسیم بریلوی پڑھنے کے لئے باقی رہ گئے تو انہوں نے اپنی محبت کا اظہار کیا :

    ’’یہ میری دونوں آنکھیں ہیں ۔ میں کس کو پہلے بلاؤں اور کس کو بعد میں ۔‘‘

    بشیربدر خود ہی اٹھ کر مائیک کے پاس آگئے اور بولے:

    ’’مجھے بے حد افسوس ہے کہ عالی جناب کنور صاحب اب ایک آنکھ سے محروم ہورہے ہیں ۔‘‘

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY