چلو بھر پانی میں جاکے ڈوب مر

محمد کمال اظہر

چلو بھر پانی میں جاکے ڈوب مر

محمد کمال اظہر

MORE BYمحمد کمال اظہر

    چلو بھر پانی میں جاکے ڈوب مر

    کچھ نہ کچھ غیرت ہی کھا کے ڈوب مر

    صاف پانی تو یہاں ملتا نہیں

    اب کسی نالے میں جاکے ڈوب مر

    شاعری تو تجھ سے ہو سکتی نہیں

    دوسروں کے شعر گا کے ڈوب مر

    بہتی گنگا سے ہے تیری دوستی

    میں تو کہتا ہوں نہا کے ڈوب مر

    یہ بھی ہے کار جواں مرداں میاں

    کھل کھلا کے ہنس ہنسا کے ڈوب مر

    عمر بھر تو نے نہیں کھایا حلال

    او نکمے زہر کھا کے ڈوب مر

    یہ برائی ایک ہی دم ختم ہو

    ساتھ اپنے آشنا کے ڈوب مر

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY