عورت

MORE BYاعجاز فاروقی

    تو نے میرے دکھ کی خاطر

    کتنے رنج سہے

    اپنی گود میں تو نے مجھ کو

    اپنے لہو کی چاندنی بخشی

    میں اک چاند بنا

    جس نے دھرتی سے یہ گھور بھیانک اندھیاروں کا خوف مٹایا

    جب تو زینت ھجلہ بنی

    تو نے اپنے خون کی آتش مجھ کو بخشی

    میں اک سورج بن کر چمکا

    جس کی دھوپ میں میری روح کا قیدی شاہیں

    ناگ کے پھندے سے چھوٹا

    تو جب آئی

    میرے جگر کی ٹھنڈک بن کر

    تو نے میری آگ پہ اپنے آنسو بکھیرے

    میری آگ میں پھول اگے

    میں اک شاعر

    اپنے فن کی افشاں لے کر

    تیری مانگ سجانے آیا

    موضوعات :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY