بہ یاد محرومؔ

عرش ملسیانی

بہ یاد محرومؔ

عرش ملسیانی

MORE BYعرش ملسیانی

    ہو کر وہ رہا عرش کہ جو تھا مقسوم

    ہر قلب ہے اس وقت حزیں و مغموم

    مرحوم کو ڈھونڈتے ہیں دنیا والے

    مرحوم سے ہو گئی ہے دنیا محروم

    اب اس سے ہی ہوگا رنج دل سے معدوم

    کیوں ہوتے ہو اے عرشؔ ملول و مغموم

    مرحوم کی یاد اور نہیں اس کے سوا

    مرحوم کی یاد ہے کلام محروم

    جب تک ہیں زمانے میں مہ و شمس و نجوم

    جب تک ہیں جہانگیر فنون اور علوم

    جب تک ہے جہاں میں نغز گوئی قائم

    ہوگا لب دنیا پہ کلام محرومؔ

    مأخذ :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY