بتلاؤ نہ دادی جان

بدیع الزماں خاور

بتلاؤ نہ دادی جان

بدیع الزماں خاور

MORE BYبدیع الزماں خاور

    آدھی آدھی رات کو یہ

    مرغا کیوں دیتا ہے اذان

    کالی کلوٹی کوئل کی

    کیوں میٹھی لگتی ہے تان

    آسمان میں دن بھر یہ

    کیوں بھرتی ہے چیل اڑان

    بلی رات کے وقت ہی کیوں

    لیتی ہے چوہوں کی جان

    دن بھر یہ سوتے رہنا

    کیوں ہے الو کی پہچان

    ندی کنارے بگلا کیوں

    روز لگاتا ہے یہ دھیان

    گرگٹ چڑھتی دھوپ میں کیوں

    رنگ بدلتا ہے ہر آن

    اتنے لمبے لمبے کیوں

    ہوتے ہیں خرگوش کے کان

    تم کو ہو معلوم تو کچھ

    بتلاؤ نا دادی جان

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY