ایک گیت کئی کھیل

رئیس فروغ

ایک گیت کئی کھیل

رئیس فروغ

MORE BYرئیس فروغ

    آئے بادل چلی ہوا

    جاگے پھول سجیں بیلیں

    آج ہماری چھٹی ہے

    چھٹی کے دن کیا کھیلیں

    ہرا سمندر گوپی چندر

    بول میری مچھلی کتنا پانی

    اپنے دل میں اتنی ہمت

    بیچ سمندر جتنا پانی

    کوڑا جمال شاہی

    پیچھے دیکھا مار کھائی

    ہنستے بستے ہنسی خوشی

    کھیلیں بہنیں کھیلیں بھائی

    کھیل بھی ہے یہ ورزش بھی

    کھیلے کودے جان بنائی

    ہم پھولوں بھرے آتے ہیں

    آتے ہیں آتے ہیں

    تم کس کو لینے آتے ہو

    آتے ہیں آتے ہیں

    وہ ساتھی جو کھیل میں اول

    جو ساتھی تعلیم میں آگے

    اس کو ہم لے جائیں گے

    اپنا ساتھی بنائیں گے

    ہم تو سب ہی آگے ہیں

    ہم تو سب ہی اول ہیں

    تم پھولوں بھرے جاتے ہو

    جاتے ہو جاتے ہو

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY