پام کے پیڑ سے گفتگو

ساقی فاروقی

پام کے پیڑ سے گفتگو

ساقی فاروقی

MORE BY ساقی فاروقی

    مجھے سبز حیرت سے کیوں دیکھتے ہو

    وہی تتلیاں جمع کرنے کی ہابی

    ادھر کھینچ لائی

    مگر تتلیاں اتنی زیرک ہیں

    ہجرت کے ٹوٹے پروں پر

    ہوا کے دوشالے میں لپٹی

    مرے خوف سے اجنبی جنگلوں میں

    کہیں جا چھپیں۔۔۔

    اور تھک ہار کر واپسی میں

    سرکتے ہوئے ایک پتھر سے بچتے ہوئے

    اس طرف میں نے دیکھا

    تو ایسا لگا

    یہ پہاڑی کسی دیو ہیکل فرشتے کا جوتا ہے

    تم کتھئی چھال کے تنگ موزے میں

    ایک پیر ڈالے

    یہ جوتا پہننے کی کوشش میں لنگڑا رہے۔۔۔

    دوسری ٹانگ شاید

    کسی عالمی جنگ میں اڑ گئی ہے

    مرا جال خالی

    مگر دل مسرت کے احساس سے بھر گیا

    تم اسی بانکپن سے

    اسی طرح

    گنجی پہاڑی پر

    اپنی ہری وگ لگائے کھڑے ہو

    یہ ہیئت کذائی جو بھائی

    تو نزدیک سے دیکھنے آ گیا ہوں

    ذرا اپنے پنکھے ہلا دو

    مجھے اپنے دامن کی ٹھنڈی ہوا دو

    بہت تھک گیا ہوں

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    پام کے پیڑ سے گفتگو نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY