تھوڑا تھوڑا خرچ کریں ہم

احمد حاطب صدیقی

تھوڑا تھوڑا خرچ کریں ہم

احمد حاطب صدیقی

MORE BYاحمد حاطب صدیقی

    ننھی سے یہ بولیں نانی

    میری پیاری گڑیا رانی

    آ جا میری گود میں آ جا

    سن لے مجھ سے ایک کہانی

    یہ جو اپنی گول زمیں ہے

    پہلے پہل تھی پانی پانی

    سب دنیا تھی ایک سمندر

    جس کی لہریں تھیں طوفانی

    رفتہ رفتہ ابھری خشکی

    ہولے ہولے اترا پانی

    پیڑ پہاڑ چٹانیں صحرا

    جنگل کا جنگل حیوانی

    ساری چیزیں ہو گئیں پیدا

    تب آئی وہ صبح سہانی

    جب اللہ نے حکم سے اپنے

    دکھلانے کو اپنی نشانی

    دنیا میں انسان کو بھیجا

    خوب بڑھی نسل انسانی

    تم کو سن کر حیرت ہوگی

    میری پیاری گڑیا رانی

    حصے چار زمیں کے ہوں تو

    ایک ہے خشکی تین ہے پانی

    لیکن استعمال کے قابل

    زیادہ پانی نہیں ہے جانی

    تھوڑا تھوڑا خرچ کریں ہم

    شروع نہ کر دیں نہر بہانی

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY