Asad Badayuni's Photo'

اسعد بدایونی

1952 - 2003 | علی گڑہ, ہندوستان

ممتاز ما بعد جدید شاعر، رسالہ’دائرے‘ کے مدیر

ممتاز ما بعد جدید شاعر، رسالہ’دائرے‘ کے مدیر

تخلص : 'اسعد'

اصلی نام : اسعد احمد

پیدائش : 25 Feb 1952 | بدایوں, ہندوستان

وفات : 05 Mar 2003 | علی گڑہ, ہندوستان

LCCN :n2009216043

نام اسعد احمد اور تخلص اسعد تھا۔ وہ ۲۵؍ فروری۱۹۵۸ء کو سہسرام ضلع بدایوں(یوپی) میں پیدا ہوئے ۔اسعد کے خاندان کا شمار بدایوں کے متمول گھرانے میں ہوتا تھا۔ علی گڑھ سے ایم اے(اردو) پھر سند فضیلت(پی ایچ ڈی) حاصل کی۔ وہ اپنی وفات ۵؍مارچ۲۰۰۳ء تک علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کے شعبۂ اردو سے متعلق رہے۔ اسعد کا اولین شعری مجموعہ ’’دھوپ کی سرحد‘‘۱۹۷۷ء میں شائع ہوا۔ ’’خیمۂ خواب‘‘(۱۹۸۴ء) اور ’’جیون کنارا‘‘(۱۹۹۲ء)شعری مجموعے بعد میں منظر عام پر آئے۔ نثر میں بھی ان کی تین کتابیں شائع ہوئیں، یعنی’’نئی غزل، نئی آوازیں‘‘(۱۹۸۷ء) ’’کاروان رفتہ‘‘(۱۹۹۱ء ) اوربیخود بدایونی۔ حیات اور ادبی خدمات‘‘(۱۹۹۵ء) ۔ آخری کتاب ان کے پی ایچ ڈی کے مقالے کا حصہ معلوم ہوتی ہے۔ ان کے آخری مجموعۂ کلام ’’وارئے شعر‘‘ ہے جس کو وہ مرتب کرچکے تھے، مگر اشاعت کی نوبت نہ آسکی۔ بحوالۂ:پیمانۂ غزل(جلد دوم)،محمد شمس الحق،صفحہ:432