بہار سب کے لئے

عبد الرحیم نشتر

بہار سب کے لئے

عبد الرحیم نشتر

MORE BY عبد الرحیم نشتر

    سرمئی پہاڑوں پر

    یہ ہرے بھرے جنگل

    شاخ شاخ ہریالی

    چومتے ہوئے پنچھی

    چار سو فضاؤں میں

    زندگی مہکتی ہے

    پھول مسکراتے ہیں

    رنگ و نور کی چادر

    اوڑھ کر ہوا نکلی

    آسمان روشن ہے

    دور تک زمیں اپنی

    بانہہ کھولے ماں جیسی

    کھیلتے پرندوں کو

    پیار سے بلاتی ہے

    تتلیوں کے جھرمٹ سے

    ایک ایک پگڈنڈی

    بے نظیر لگتی ہے

    جیسے کوئی ماں بیٹی

    صاف ستھرے آنگن میں

    چٹکیوں سے رنگوں کی

    روشنی لٹاتی ہوں

    سرمئی پہاڑوں کے

    مشرقی کناروں پر

    روشنی چمکتی ہے

    زندگی دمکتی ہے

    یہ بہار کا موسم

    اس زمیں سے اگتا ہے

    اس زمیں کا حصہ ہے

    جس کسی کا جی چاہے

    یہ بہار لے جائے

    سرمئی پہاڑوں کے

    جنگلوں کی شادابی

    شاخ شاخ ہریالی

    جس کسی کا جی چاہے

    اپنی روح مہکائے

    مآخذ:

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY