بدھو سی ایک بچی

احمد حاطب صدیقی

بدھو سی ایک بچی

احمد حاطب صدیقی

MORE BY احمد حاطب صدیقی

    سیما نے مجھ سے پوچھا

    اے میرے پیارے چچا

    یہ روز آپ مجھ کو

    دیتے تھے کیسا غچا

    کہتے تھے کر رہا ہوں

    وعدہ میں تم سے سچا

    جنگل کے پیڑ پر سے

    بندر کا ایک بچا

    لاؤں گا توڑ کر میں

    لیکن ابھی ہے کچا

    سمجھے تھے آپ ہے یہ

    بدھو سی ایک بچی

    چھ سال کی ہے ہوگی

    کچھ عقل کی بھی کچی

    لیکن سمجھ گئی ہوں

    میں ساری غچا غچی

    بالکل برا نہ مانیں

    میں بات کہہ دوں سچی

    بس ہو گئی ہے چچا

    اب آپ کی بھی کچی

    مجھ کو بتا چکی ہیں

    کل رات میری چچی

    اگتے نہیں شجر پر

    یوں بندروں کے بچے

    ہوتے نہیں وہ ہرگز

    ہرگز بھی پکے کچے

    میں آپ کے تو وعدے

    مانوں کبھی نہ سچے

    مت دیجئے آپ مجھ کو

    اب ایسے ویسے غچے

    چچی نے خود ہیں دیکھے

    بندر کے انڈے بچے

    بندریا انڈے دے دے

    جب گھونسلوں کے اندر

    بنتے ہیں پہلے چوزے

    پھر پیارے پیارے بندر

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Added to your favorites

    Removed from your favorites