میں فقط اس جرم میں دنیا میں رسوا ہو گیا

افضل منہاس

میں فقط اس جرم میں دنیا میں رسوا ہو گیا

افضل منہاس

MORE BYافضل منہاس

    میں فقط اس جرم میں دنیا میں رسوا ہو گیا

    میں نے جس چہرے کو دیکھا تیرے جیسا ہو گیا

    چاند میں کیسے نظر آئے تری صورت مجھے

    آندھیوں سے آسماں کا رنگ میلا ہو گیا

    ایک میں ہی روشنی کے خواب کو ترسا نہیں

    آج تو سورج بھی جب نکلا تو اندھا ہو گیا

    یہ بھی شاید زندگی کی اک ادا ہے دوستو

    جس کو ساتھی مل گیا وہ اور تنہا ہو گیا

    ایک پتھر زندگی نے تاک کر مارا مجھے

    چوٹ وہ کھائی کہ سارا جسم دوہرا ہو گیا

    مل گیا مٹی میں جب افضلؔ تو یہ آئی صدا

    گر گئی دیوار اور سایہ اکیلا ہو گیا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY