زندگی ان کی چاہ میں گزری

شکیل بدایونی

زندگی ان کی چاہ میں گزری

شکیل بدایونی

MORE BYشکیل بدایونی

    زندگی ان کی چاہ میں گزری

    مستقل درد و آہ میں گزری

    رحمتوں سے نباہ میں گزری

    عمر ساری گناہ میں گزری

    ہائے وہ زندگی کی اک ساعت

    جو تری بارگاہ میں گزری

    سب کی نظروں میں سر بلند رہے

    جب تک ان کی نگاہ میں گزری

    میں وہ اک رہرو محبت ہوں

    جس کی منزل بھی راہ میں گزری

    اک خوشی ہم نے دل میں چاہی تھی

    وہ بھی غم کی پناہ میں گزری

    زندگی اپنی اے شکیلؔ اب تک

    تلخیٔ رسم و راہ میں گزری

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    استاد موہن خان

    استاد موہن خان

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY