آسان اور پسندیدہ نظمیں

آسان اور پسندیدہ کلام

کا ذخیرہ

125.3K
Favorite

باعتبار

ہمیشہ دیر کر دیتا ہوں

ہمیشہ دیر کر دیتا ہوں میں ہر کام کرنے میں

منیر نیازی

کچھ عشق کیا کچھ کام کیا

کچھ عشق کیا کچھ کام کیا

فیض احمد فیض

خوبصورت موڑ

چلو اک بار پھر سے اجنبی بن جائیں ہم دونوں

ساحر لدھیانوی

کبھی کبھی

کبھی کبھی مرے دل میں خیال آتا ہے

ساحر لدھیانوی

بول

بول کہ لب آزاد ہیں تیرے

فیض احمد فیض

دستور

دیپ جس کا محلات ہی میں جلے

حبیب جالب

آوارہ

شہر کی رات اور میں ناشاد و ناکارا پھروں

اسرار الحق مجاز

تاج محل

تاج تیرے لیے اک مظہر الفت ہی سہی

ساحر لدھیانوی

عورت

اٹھ مری جان مرے ساتھ ہی چلنا ہے تجھے

کیفی اعظمی

زندگی سے ڈرتے ہو

زندگی سے ڈرتے ہو؟

ن م راشد

یاد

دشت تنہائی میں اے جان جہاں لرزاں ہیں

فیض احمد فیض

تنہائی

پھر کوئی آیا دل زار نہیں کوئی نہیں

فیض احمد فیض

ترانۂ ہندی

سارے جہاں سے اچھا ہندوستاں ہمارا

علامہ اقبال

یہ کھیل کیا ہے

مرے مخالف نے چال چل دی ہے

جاوید اختر

کوئی یہ کیسے بتائے

کوئی یہ کیسے بتائے کہ وہ تنہا کیوں ہے

کیفی اعظمی

کتابیں

کتابیں جھانکتی ہیں بند الماری کے شیشوں سے

گلزار

ظلمت کو ضیا صرصر کو صبا بندے کو خدا کیا لکھنا

ظلمت کو ضیا صرصر کو صبا بندے کو خدا کیا لکھنا

حبیب جالب

اعتراف

اب مرے پاس تم آئی ہو تو کیا آئی ہو

اسرار الحق مجاز

وصال کی خواہش

کہہ بھی دے اب وہ سب باتیں

منیر نیازی

ابھی تو میں جوان ہوں

ہوا بھی خوش گوار ہے

حفیظ جالندھری

اندیشہ

بات نکلے گی تو پھر دور تلک جائے گی

کفیل آزر امروہوی

وقت

یہ وقت کیا ہے

جاوید اختر

دشواری

میں بھول جاؤں تمہیں

جاوید اختر

اس بستی کے اک کوچے میں

اس بستی کے اک کوچے میں اک انشاؔ نام کا دیوانا

ابن انشا

الاؤ

رات بھر سرد ہوا چلتی رہی

گلزار

اب سو جاؤ

اب سو جاؤ

فہمیدہ ریاض

ہندوستانی بچوں کا قومی گیت

چشتی نے جس زمیں میں پیغام حق سنایا

علامہ اقبال

آدمی بلبلہ ہے

آدمی بلبلہ ہے پانی کا

گلزار

متاع غیر

میرے خوابوں کے جھروکوں کو سجانے والی

ساحر لدھیانوی

یہ باتیں جھوٹی باتیں ہیں

یہ باتیں جھوٹی باتیں ہیں یہ لوگوں نے پھیلائی ہیں

ابن انشا

دعا

آئیے ہاتھ اٹھائیں ہم بھی

فیض احمد فیض

نوجوان خاتون سے

حجاب فتنہ پرور اب اٹھا لیتی تو اچھا تھا

اسرار الحق مجاز

پاس رہو

تم مرے پاس رہو

فیض احمد فیض

ہراس

تیرے ہونٹوں پہ تبسم کی وہ ہلکی سی لکیر

ساحر لدھیانوی

غالب

بلی ماراں کے محلے کی وہ پیچیدہ دلیلوں کی سی گلیاں

گلزار

دستک

صبح صبح اک خواب کی دستک پر دروازہ کھولا' دیکھا

گلزار

اکیلے

کس قدر سیدھا، سہل، صاف ہے رستہ دیکھو

گلزار

مجبوریاں

میں آہیں بھر نہیں سکتا کہ نغمے گا نہیں سکتا

اسرار الحق مجاز

آخری دن کی تلاش

خدا نے قرآن میں کہا ہے

محمد علوی

ملاقات

یہ رات اس درد کا شجر ہے

فیض احمد فیض

وہ کمرہ یاد آتا ہے

میں جب بھی

جاوید اختر

مکان

آج کی رات بہت گرم ہوا چلتی ہے

کیفی اعظمی

کس سے محبت ہے

بتاؤں کیا تجھے اے ہم نشیں کس سے محبت ہے

اسرار الحق مجاز

لیکن بڑی دیر ہو چکی تھی

اس عمر کے بعد اس کو دیکھا!

پروین شاکر

تیرے خوشبو میں بسے خط

پیار کی آخری پونجی بھی لٹا آیا ہوں

راجندر ناتھ رہبر

نذر علی گڑھ

سرشار نگاہ نرگس ہوں پا بستۂ گیسوئے سنبل ہوں

اسرار الحق مجاز

بیٹھا ہے میرے سامنے وہ

بیٹھا ہے میرے سامنے وہ

فہمیدہ ریاض

گرہیں

مجھ کو بھی ترکیب سکھا کوئی یار جلاہے

گلزار

فن کار

میں نے جو گیت ترے پیار کی خاطر لکھے

ساحر لدھیانوی

گفتگو (ہند پاک دوستی کے نام)

گفتگو بند نہ ہو

علی سردار جعفری

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
بولیے