اب آئیں یا نہ آئیں ادھر پوچھتے چلو

ساحر لدھیانوی

اب آئیں یا نہ آئیں ادھر پوچھتے چلو

ساحر لدھیانوی

MORE BY ساحر لدھیانوی

    اب آئیں یا نہ آئیں ادھر پوچھتے چلو

    کیا چاہتی ہے ان کی نظر پوچھتے چلو

    ہم سے اگر ہے ترک تعلق تو کیا ہوا

    یارو کوئی تو ان کی خبر پوچھتے چلو

    جو خود کو کہہ رہے ہیں کہ منزل شناس ہیں

    ان کو بھی کیا خبر ہے مگر پوچھتے چلو

    کس منزل مراد کی جانب رواں ہیں ہم

    اے رہروان خاک بسر پوچھتے چلو

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    اب آئیں یا نہ آئیں ادھر پوچھتے چلو نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Added to your favorites

    Removed from your favorites