اب خوشی ہے نہ کوئی درد رلانے والا

ندا فاضلی

اب خوشی ہے نہ کوئی درد رلانے والا

ندا فاضلی

MORE BY ندا فاضلی

    اب خوشی ہے نہ کوئی درد رلانے والا

    ہم نے اپنا لیا ہر رنگ زمانے والا

    ایک بے چہرہ سی امید ہے چہرہ چہرہ

    جس طرف دیکھیے آنے کو ہے آنے والا

    اس کو رخصت تو کیا تھا مجھے معلوم نہ تھا

    سارا گھر لے گیا گھر چھوڑ کے جانے والا

    دور کے چاند کو ڈھونڈو نہ کسی آنچل میں

    یہ اجالا نہیں آنگن میں سمانے والا

    اک مسافر کے سفر جیسی ہے سب کی دنیا

    کوئی جلدی میں کوئی دیر سے جانے والا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Added to your favorites

    Removed from your favorites