اچانک کس کو یاد آئی ہماری

کاشف حسین غائر

اچانک کس کو یاد آئی ہماری

کاشف حسین غائر

MORE BYکاشف حسین غائر

    اچانک کس کو یاد آئی ہماری

    کہانی کس نے دہرائی ہماری

    چلو آیا نہ آیا جانے والا

    صدا تو لوٹ کر آئی ہماری

    گزشتہ شب ہوا سے گفتگو کی

    چراغوں نے قسم کھائی ہماری

    نظر آیا ہے وہ بیمار اپنا

    کھلی جس پر مسیحائی ہماری

    تری خوشبو سے ہے آباد اب تک

    یہ باغ دل یہ انگنائی ہماری

    زمیں آباد ہوتی جا رہی ہے

    کہاں جائے گی تنہائی ہماری

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY