اگر نہیں قصد اے ظالم مرے دل کے ستانے کا

عبدالوہاب یکروؔ

اگر نہیں قصد اے ظالم مرے دل کے ستانے کا

عبدالوہاب یکروؔ

MORE BYعبدالوہاب یکروؔ

    اگر نہیں قصد اے ظالم مرے دل کے ستانے کا

    سبب کیا ہے تجھے مجھ سے نمانے سے بہانے کا

    ہوئی مدت نہیں طاقت مرے دل کوں جدائی کی

    کرم کر آ سجن یا فکر کر میرے بلانے کا

    شہ خوباں مرے گھر رات کو آیا ہے اے مطرب

    مرا دل شاد ہے گا راگ اے مطرب شہانے کا

    نہ ہووے کیوں کے گردوں پے صدا دل کی بلند ایتی

    ہماری آہ ہے ڈنکا دمامے کے بجانے کا

    جبھی ہو وصل ہانسی سیں حصار پیرہن تب

    ترا یکروؔ سنامی ہے نہیں ہرگز سمانے کا

    مأخذ :
    • کتاب : diwan-e-yakro (Pg. 1)
    • Author : Abdul Wahab yakro
    • مطبع : sara-e-road muzaffarpur (1978)
    • اشاعت : 1978

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY