بنے ہیں کام سب الجھن سے میرے

کاشف حسین غائر

بنے ہیں کام سب الجھن سے میرے

کاشف حسین غائر

MORE BYکاشف حسین غائر

    بنے ہیں کام سب الجھن سے میرے

    یہی اطوار ہیں بچپن سے میرے

    ہوا بھی پوچھنے آتی نہیں اب

    وہ خوشبو کیا گئی آنگن سے میرے

    زمیں ہموار ہو کر رہ گئی ہے

    اڑی ہے دھول وہ دامن سے میرے

    سنو اس دشت کا ہم زاد ہوں میں

    یہ واقف ہے اکیلے پن سے میرے

    ہوائے بے دلی بھی خوب نکلی

    خلش تک لے اڑی جیون سے میرے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY