بے طرح آپ کی یادوں نے ستایا ہے مجھے

ممتاز میرزا

بے طرح آپ کی یادوں نے ستایا ہے مجھے

ممتاز میرزا

MORE BYممتاز میرزا

    بے طرح آپ کی یادوں نے ستایا ہے مجھے

    چاندنی راتوں نے آ آ کے رلایا ہے مجھے

    آپ سے کوئی شکایت نہ زمانے سے گلہ

    میرے حالات نے مجبور بنایا ہے مجھے

    آج پھر اوج پہ ہے اپنا مقدر شاید

    آج پھر آپ نے نظروں سے گرایا ہے مجھے

    اپنے بیگانے ہوئے اور زمانہ دشمن

    بے دماغی نے مری دن یہ دکھایا ہے مجھے

    کون سے دشت میں لے آیا مجھے میرا جنوں

    مڑ کے دیکھا ہے تو کچھ خوف سا آیا ہے مجھے

    پھر ہوئے آج بہم جام گل و نغمۂ شب

    پھر مرے ماضی نے ممتازؔ بلایا ہے مجھے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY
    بولیے