چپکے چپکے ایک تو ٹیس آپ جمانی اوروں سے

معروف دہلوی

چپکے چپکے ایک تو ٹیس آپ جمانی اوروں سے

معروف دہلوی

MORE BYمعروف دہلوی

    چپکے چپکے ایک تو ٹیس آپ جمانی اوروں سے

    تس الٹی ہم کو تہمت آ کے لگانی اوروں سے

    ہم سے تو بس باندھے رکھتی شرم کی پٹی آنکھوں پر

    چوری چوری محفل میں پر آنکھ لڑانی اوروں سے

    اوروں کے تو ہم سے نہ کہنے ہم سے لے کر جی کی بات

    جوں کی توں سب بات یہ کیوں جی جا کے سنانی اوروں سے

    مجھ سے کہو ہو آہیں بھر بھر ہوک جگر میں اٹھتی ہے

    اور یوں ہی در پردہ اپنی چاہ جتانی اوروں سے

    لونگ کھلائیں ہم جو کبھی تو اس کو ڈالو منہ سے تھوک

    اور یہ کیوں جی روز مفرح چھینکے کھانی اوروں سے

    اوروں کے تو گھر میں جا کر دوڑ کے پینی آپ شراب

    میرے آگے پی نہیں سکتے مانگ کے پانی اوروں سے

    ہم جو پڑھیں کوئی شعر تو کہنا شعر سے ہم کو ذوق نہیں

    میرؔ حسن کے گھر میں کہانی جا کے پڑھانی اوروں سے

    پردہ اس میں کیا ہے پیارے دنیا میں معروفؔ ہے یہ

    عاشق سے ہے بیر تجھے اور الفت جانی اوروں سے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY