دیوانگی سے دوش پہ زنار بھی نہیں

مرزا غالب

دیوانگی سے دوش پہ زنار بھی نہیں

مرزا غالب

MORE BYمرزا غالب

    دیوانگی سے دوش پہ زنار بھی نہیں

    یعنی ہمارے جیب میں اک تار بھی نہیں

    دل کو نیاز حسرت دیدار کر چکے

    دیکھا تو ہم میں طاقت دیدار بھی نہیں

    ملنا ترا اگر نہیں آساں تو سہل ہے

    دشوار تو یہی ہے کہ دشوار بھی نہیں

    بے عشق عمر کٹ نہیں سکتی ہے اور یاں

    طاقت بقدر لذت آزار بھی نہیں

    شوریدگی کے ہاتھ سے ہے سر وبال دوش

    صحرا میں اے خدا کوئی دیوار بھی نہیں

    گنجایش عداوت اغیار یک طرف

    یاں دل میں ضعف سے ہوس یار بھی نہیں

    ڈر نالہ ہائے زار سے میرے خدا کو مان

    آخر نوائے مرغ گرفتار بھی نہیں

    دل میں ہے یار کی صف مژگاں سے روکشی

    حالانکہ طاقت خلش خار بھی نہیں

    اس سادگی پہ کون نہ مر جائے اے خدا

    لڑتے ہیں اور ہاتھ میں تلوار بھی نہیں

    دیکھا اسدؔ کو خلوت و جلوت میں بارہا

    دیوانہ گر نہیں ہے تو ہشیار بھی نہیں

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    ذوالفقار علی بخاری

    ذوالفقار علی بخاری

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق,

    نعمان شوق

    دیوانگی سے دوش پہ زنار بھی نہیں نعمان شوق

    مأخذ :
    • کتاب : Deewan-e-Ghalib Jadeed (Al-Maroof Ba Nuskha-e-Hameedia) (Pg. 285)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY