دنیا کے جنجال نہ پوچھ

عزیز انصاری

دنیا کے جنجال نہ پوچھ

عزیز انصاری

MORE BYعزیز انصاری

    دنیا کے جنجال نہ پوچھ

    تجھ بن میرا حال نہ پوچھ

    کس نے لیا سر آنکھوں پر

    کس نے کیا پامال نہ پوچھ

    اس کی آنکھوں کو تو پڑھ

    کیوں ہے چہرہ لال نہ پوچھ

    بکھر گیا ریزہ ریزہ

    جیون کا بھونچال نہ پوچھ

    مستقبل کے سپنے دیکھ

    بیتے ماہ و سال نہ پوچھ

    تو جو چاہے حکم سنا

    مجھ سے مرے اعمال نہ پوچھ

    میرؔ کے گھر کی حالت دیکھ

    میرے گھر کا حال نہ پوچھ

    جس نے بچایا خنجر سے

    کس کی تھی وہ ڈھال نہ پوچھ

    کیسے دیں بچوں کو عزیزؔ

    سبزی روٹی دال نہ پوچھ

    مأخذ :
    • کتاب : Bole Meri Gazal (Pg. 93)
    • Author : Aziz Ansari
    • مطبع : Aziz Ansari, Station Director Akashvani Jalgaon (2000)
    • اشاعت : 2000

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY