Font by Mehr Nastaliq Web

aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

فرصت میں رہا کرتے ہیں فرصت سے زیادہ

سلطان اختر

فرصت میں رہا کرتے ہیں فرصت سے زیادہ

سلطان اختر

MORE BYسلطان اختر

    فرصت میں رہا کرتے ہیں فرصت سے زیادہ

    مصروف ہیں ہم لوگ ضرورت سے زیادہ

    ملتا ہے سکوں مجھ کو قناعت سے زیادہ

    مسرور ہوں میں اپنی مسرت سے زیادہ

    چلتا ہی نہیں دانش و حکمت سے کوئی کام

    بنتی ہے یہاں بات حماقت سے زیادہ

    تنہا میں ہراساں نہیں اس کار جنوں میں

    صحرا ہے پریشاں مری وحشت سے زیادہ

    اب کوئی بھی سچائی مرے ساتھ نہیں ہے

    یعنی میں گنہ گار ہوں تہمت سے زیادہ

    اس ریگ رواں کو میں سمیٹوں بھی کہاں تک

    بکھرا ہے وہ ہر سو مری وسعت سے زیادہ

    روشن ہے بہت جھوٹ مرے عہد میں اخترؔ

    افسانہ منور ہے حقیقت سے زیادہ

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق,

    نعمان شوق

    فرصت میں رہا کرتے ہیں فرصت سے زیادہ نعمان شوق

    یہ متن درج ذیل زمرے میں بھی شامل ہے

    ગુજરાતી ભાષા-સાહિત્યનો મંચ : રેખ્તા ગુજરાતી

    ગુજરાતી ભાષા-સાહિત્યનો મંચ : રેખ્તા ગુજરાતી

    મધ્યકાલથી લઈ સાંપ્રત સમય સુધીની ચૂંટેલી કવિતાનો ખજાનો હવે છે માત્ર એક ક્લિક પર. સાથે સાથે સાહિત્યિક વીડિયો અને શબ્દકોશની સગવડ પણ છે. સંતસાહિત્ય, ડાયસ્પોરા સાહિત્ય, પ્રતિબદ્ધ સાહિત્ય અને ગુજરાતના અનેક ઐતિહાસિક પુસ્તકાલયોના દુર્લભ પુસ્તકો પણ તમે રેખ્તા ગુજરાતી પર વાંચી શકશો

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے