گرم رفتار ہے تیری یہ پتا دیتے ہیں

رشید لکھنوی

گرم رفتار ہے تیری یہ پتا دیتے ہیں

رشید لکھنوی

MORE BYرشید لکھنوی

    گرم رفتار ہے تیری یہ پتا دیتے ہیں

    دم بہ دم لو ترے نقش کف پا دیتے ہیں

    ہجر سے کرتے ہیں ناشاد ہمیں وصل سے شاد

    خود مرض دیتے ہیں اور آپ شفا دیتے ہیں

    دل کی تم بات سمجھتے ہو زباں گو نہ ہلے

    خوب سنتے ہو جو چپکے سے صدا دیتے ہیں

    کم نہ سمجھیں مری آہوں کے شراروں کو حضور

    آگ ابھی سارے زمانے میں لگا دیتے ہیں

    تم نے احسان کیا ہے کہ نمک چھڑکا ہے

    اب مجھے زخم جگر اور مزا دیتے ہیں

    ان کی تقدیر میں ہے میرے لہو میں بھرنا

    خون کی بو ترے دامان قبا دیتے ہیں

    صاف کرتے ہیں ابھی غیر یہ وہ تیغ ادا

    دوست آ کے مجھے پیغام قضا دیتے ہیں

    جاگو اے مملکت عشق کے سونے والو

    شب کو دربان‌ در یار صدا دیتے ہیں

    جتنے شاعر ہیں انہوں نے ہمیں عزت دی ہے

    ہم رشیدؔ ان کو شب و روز دعا دیتے ہیں

    مآخذ :
    • کتاب : Gulistan-e-Rasheed (Pg. ghazal-48 page-54)
    • Author : Piyare Sahab Rasheed
    • اشاعت : 1952

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY