ہر قدم سانپوں کی آہٹ اور میں

صالح ندیم

ہر قدم سانپوں کی آہٹ اور میں

صالح ندیم

MORE BYصالح ندیم

    ہر قدم سانپوں کی آہٹ اور میں

    آگے پیچھے سرسراہٹ اور میں

    اک طرف چڑھتے ہوئے دریا کی سانس

    اک طرف جنگل کی آہٹ اور میں

    گاؤں کی پگڈنڈیوں سے شہر تک

    چہرہ چہرہ بوکھلاہٹ اور میں

    ایک چہرہ روشنی سا ذہن میں

    بند کمرہ جگمگاہٹ اور میں

    سرد ماتھے پر پسینے کی تپش

    شمع کی لو تھرتھراہٹ اور میں

    اک ادھورے خواب کی تعبیر دیکھ

    ایک پنجرہ پھڑپھڑاہٹ اور میں

    ڈھلتے سورج پر حکومت شام کی

    آئینے پر ملگجاہٹ اور میں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY