حسرت انتظار یار نہ پوچھ

ن م راشد

حسرت انتظار یار نہ پوچھ

ن م راشد

MORE BY ن م راشد

    حسرت انتظار یار نہ پوچھ

    ہائے وہ شدت انتظار نہ پوچھ

    رنگ گلشن دم بہار نہ پوچھ

    وحشت قلب بے قرار نہ پوچھ

    صدمۂ عندلیب زار نہ پوچھ

    تلخ انجامئ بہار نہ پوچھ

    غیر پر لطف میں رہین ستم

    مجھ سے آئین بزم یار نہ پوچھ

    دے دیا درد مجھ کو دل کے عوض

    ہائے لطف ستم شعار نہ پوچھ

    پھر ہوئی یاد مے کشی تازہ

    مستی ابر نو بہار نہ پوچھ

    مجھ کو دھوکا ہے تار بستر کا

    نا توانئ جسم یار نہ پوچھ

    میں ہوں نا آشنائے وصل ہنوز

    مجھ سے کیف وصال یار نہ پوچھ

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY