حصار غم سے جو نکلے بھی تو کدھر آئے

خان رضوان

حصار غم سے جو نکلے بھی تو کدھر آئے

خان رضوان

MORE BYخان رضوان

    حصار غم سے جو نکلے بھی تو کدھر آئے

    بہت ملال ہوا لوٹ کے جو گھر آئے

    دکھائی کچھ نہ دے لیکن مری نگاہوں کو

    ترے جمال کا منظر فقط نظر آئے

    تمہارے در سے گزر جاؤں اور خبر بھی نہ ہو

    مرے سفر میں اک ایسی بھی رہ گزر آئے

    تمام عمر میں زد میں رہا ہوں راتوں کی

    مرے خدا مرے حصے کی اب سحر آئے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    خان رضوان

    خان رضوان

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY