اس قدر تھا یہ گریبان مرا چاک میاں

خان جانباز

اس قدر تھا یہ گریبان مرا چاک میاں

خان جانباز

MORE BYخان جانباز

    اس قدر تھا یہ گریبان مرا چاک میاں

    قیس بھی دیکھ کے کہتا تھا خطرناک میاں

    سرخ آنکھیں نا پھٹی آپ کی پوشاک میاں

    ہجر کاٹا ہے بھلا آپ نے کیا خاک میاں

    جاوداں عشق ہو اپنا یہ دعا مانگی تھی

    پھر ہوا عشق کا انجام المناک میاں

    پھینک آیا ہوں میں اک ریل کی پٹری پہ بدن

    گھر میں رکھتا بھلا کب تک خس و خاشاک میاں

    عمر بھر مجھ کو کسی ایک کا ہونے نہ دیا

    مجھ سے بڑھ کر تو مرا دل ہی تھا چالاک میاں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY