عشق کی اک رنگین صدا پر برسے رنگ

سوپنل تیواری

عشق کی اک رنگین صدا پر برسے رنگ

سوپنل تیواری

MORE BYسوپنل تیواری

    عشق کی اک رنگین صدا پر برسے رنگ

    رنگ ہو مجنوں اور لیلیٰ پر برسے رنگ

    کب تک چنری پر ہی ظلم ہوں رنگوں کے

    رنگریزہ تیری بھی قبا پر برسے رنگ

    خواب بھریں تری آنکھیں میری آنکھوں میں

    ایک گھٹا سے ایک گھٹا پر برسے رنگ

    اک سترنگی خوشبو اوڑھ کے نکلے تو

    اس بے رنگ اداس ہوا پر برسے رنگ

    اے دیوی رخسار پہ تیرے رنگ لگے

    جوگی کی المست جٹا پر برسے رنگ

    میرے عناصر خاک نہ ہوں بس رنگ بنیں

    اور جنگل صحرا دریا پر برسے رنگ

    سورج اپنے پر جھٹکے اور صبح اڑے

    نیند نہائی اس دنیا پر برسے رنگ

    موضوعات:

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY