aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

عشق میں ہو کے مبتلا دل نے کمال کر دیا

عظیم حیدر سید

عشق میں ہو کے مبتلا دل نے کمال کر دیا

عظیم حیدر سید

MORE BYعظیم حیدر سید

    عشق میں ہو کے مبتلا دل نے کمال کر دیا

    یوں ہی سی ایک شکل کو زہرہ جمال کر دیا

    ہم کو تمہاری بزم سے اٹھنے کا کچھ قلق نہیں

    جیسا خیال ہو سکا ویسا خیال کر دیا

    سیل روان عمر کے آگے ٹھہر سکا نہ کچھ

    وقت نے مہر حسن کو رو بہ زوال کر دیا

    ایک سم عذاب سا پھیل گیا وجود میں

    روز و شب فراق نے جینا محال کر دیا

    میری زبان خشک پر ریت کا ذائقہ سا ہے

    موسم بر شگال نے کیسا یہ حال کر دیا

    دھند میں کھو کے رہ گئیں صورتیں مہر و ماہ سی

    وقت کی گرد نے انہیں خواب و خیال کر دیا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے