کون ہے جس کا سارا دکھ ہے

صباحت عروج

کون ہے جس کا سارا دکھ ہے

صباحت عروج

MORE BYصباحت عروج

    کون ہے جس کا سارا دکھ ہے

    دکھ بھی جس کا چارہ دکھ ہے

    میٹھی باتیں کرتا ہے وہ

    اور آنکھوں میں کھارا دکھ ہے

    میں عورت ہوں مجھ سے ملیے

    میرا مٹی گارا دکھ ہے

    عشق میں دکھ ہی چارہ سمجھا

    اور وجہ بیچارہ دکھ ہے

    دیکھ خدا اب تیرے ہوتے

    میرا صرف سہارا دکھ ہے

    ایک کنارہ تم ہو یعنی

    میرا ایک کنارہ دکھ ہے

    ہنستے رہتے ہیں ہم دونوں

    میں ہوں دکھ کا مارا دکھ ہے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY