خدا کہوں گا تمہیں ناخدا کہوں گا تمہیں

جمیل الدین عالی

خدا کہوں گا تمہیں ناخدا کہوں گا تمہیں

جمیل الدین عالی

MORE BYجمیل الدین عالی

    خدا کہوں گا تمہیں ناخدا کہوں گا تمہیں

    پکارنا ہی پڑے گا تو کیا کہوں گا تمہیں

    مری پسند مرے نام پر نہ حرف آئے

    بہت حسین بہت با وفا کہوں گا تمہیں

    ہزار دوست ہیں وجہ ملال پوچھیں گے

    سبب تو صرف تمہیں ہو میں کیا کہوں گا تمہیں

    ابھی سے ذہن میں رکھنا نزاکتیں میری

    کہ ہر نگاہ کرم پر خفا کہوں گا تمہیں

    ابھی سے اپنی بھی مجبوریوں کو سوچ رکھو

    کہ تم ملو نہ ملو مدعا کہوں گا تمہیں

    قسم شرافت فن کی کہ اب غزل میں کبھی

    تمہارا نام نہ لوں گا صبا کہوں گا تمہیں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY