کس نے کہا آپ سے میری مصیبت ہے کیا

محبوب خزاں

کس نے کہا آپ سے میری مصیبت ہے کیا

محبوب خزاں

MORE BYمحبوب خزاں

    کس نے کہا آپ سے میری مصیبت ہے کیا

    اب یہ ندامت ہے کیوں اس کی ضرورت ہے کیا

    اب یہ توجہ ہے کیوں میرے شب و روز پر

    اپنے شب و روز سے آپ کو فرصت ہے کیا

    کون دکھائے مجھے شام سے کتنی حسیں

    کون بتائے مجھے وقت کی قیمت ہے کیا

    اتنے سماں اتنے شہر ایک لگن ایک لہر

    سات برس چپ رہے اور شکایت ہے کیا

    اس بھرے بازار میں ہم تو اکیلے خزاںؔ

    کیوں ہیں مرے ساتھ لوگ غم کوئی دولت ہے کیا

    مأخذ :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے