aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

کسی کا یوں تو ہوا کون عمر بھر پھر بھی

عارف حسن  خان

کسی کا یوں تو ہوا کون عمر بھر پھر بھی

عارف حسن خان

MORE BYعارف حسن خان

    کسی کا یوں تو ہوا کون عمر بھر پھر بھی

    نہ جانے کیوں تھا یقیں تیرے پیار پر پھر بھی

    ہزار بار مرے دل کو اس نے ٹھکرایا

    مجھے ہے اس سے امید وفا مگر پھر بھی

    تمہارے نقش قدم پر گیا میں سر بہ سجود

    کسی کے آگے جھکایا نہ تھا یہ سر پھر بھی

    میں اس کی چاہ میں دونوں جہان چھوڑ چلا

    وہ بے وفا نہ مرا ہو سکا مگر پھر بھی

    تمہاری بزم سے نکلے تو پھر ملی نہ اماں

    بھٹکتے پھرتے رہے گرچہ در بہ در پھر بھی

    نہ تو ہی تو وہ رہا اور نہ میں ہی میں وہ رہا

    ہے نقش نام ترا میرے قلب پر پھر بھی

    میں اپنی جان بھی اس پر لٹا کے دیکھ چکا

    اسے عزیز رہا مجھ سے مال و زر پھر بھی

    میں تجھ کو چھوڑ کے سر پھوڑنے کہاں جاؤں

    مرے نصیب میں ہے تیرا سنگ در پھر بھی

    بنا سکے نہ ترے دل میں اپنا گھر عارفؔ

    لٹا دیا تری چاہت میں اپنا گھر پھر بھی

    مأخذ:

    Kuchh Nazmen Kuchh Ghazalen (Pg. 154)

    • مصنف: Arif Hasan Khan
      • اشاعت: 2011
      • ناشر: Arif Hasan Khan
      • سن اشاعت: 2011

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے