موج خوں سر سے گزر جاتی ہے ہر رات مرے

فضیل جعفری

موج خوں سر سے گزر جاتی ہے ہر رات مرے

فضیل جعفری

MORE BYفضیل جعفری

    موج خوں سر سے گزر جاتی ہے ہر رات مرے

    پھوٹ کر خوابوں میں روتا ہے کوئی سات مرے

    اب نہ وہ گیت نہ چوپال نہ پنگھٹ نہ الاؤ

    کھو گئے شہروں کے ہنگاموں میں دیہات مرے

    زندگی بھول گئی اپنے غموں میں اس کو

    دولت درد وفا بھی نہ لگی ہات مرے

    مدتوں پہلے کہ جب تجھ سے تعارف بھی نہ تھا

    تیری تصویر بناتے تھے خیالات مرے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY