aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

مری بھی مان مرا عکس مت دکھا مجھ کو

بمل کرشن اشک

مری بھی مان مرا عکس مت دکھا مجھ کو

بمل کرشن اشک

MORE BYبمل کرشن اشک

    مری بھی مان مرا عکس مت دکھا مجھ کو

    میں رو پڑوں گا مرے سامنے نہ لا مجھ کو

    میں بند کمرے کی مجبوریوں میں لیٹا رہا

    پکارتی پھری بازار میں ہوا مجھ کو

    تو سامنے ہے تو آواز کون سنتا ہے

    جو ہو سکے تو کہیں دور سے بلا مجھ کو

    تو عکس بن کے مرے آئینے میں بیٹھا رہا

    تمام عمر کوئی دیکھتا ہوا مجھ کو

    ورق ورق یوں ہی پھرتا رہوں کہاں تک میں

    کتاب جان کے بک شیلف پر سجا مجھ کو

    خدا تو اب بھی ہے وہ اشکؔ کیا بگڑ جاتا

    اگر وہ اور طریقے سے سوچتا مجھ کو

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے