مری زندگی ہے ظالم ترے غم سے آشکارا

شکیل بدایونی

مری زندگی ہے ظالم ترے غم سے آشکارا

شکیل بدایونی

MORE BYشکیل بدایونی

    مری زندگی ہے ظالم ترے غم سے آشکارا

    ترا غم ہے در حقیقت مجھے زندگی سے پیارا

    وہ اگر برا نہ مانیں تو جہان رنگ و بو میں

    میں سکون دل کی خاطر کوئی ڈھونڈ لوں سہارا

    مجھے تجھ سے خاص نسبت میں رہین موج طوفاں

    جنہیں زندگی تھی پیاری انہیں مل گیا کنارا

    مجھے آ گیا یقیں سا کہ یہی ہے میری منزل

    سر راہ جب کسی نے مجھے دفعتاً پکارا

    یہ خنک خنک ہوائیں یہ جھکی جھکی گھٹائیں

    وہ نظر بھی کیا نظر ہے جو سمجھ نہ لے اشارہ

    میں بتاؤں فرق ناصح جو ہے مجھ میں اور تجھ میں

    مری زندگی تلاطم تری زندگی کنارا

    مجھے فخر ہے اسی پر یہ کرم بھی ہے مجھی پر

    تری کم نگاہیاں بھی مجھے کیوں نہ ہوں گوارا

    مجھے گفتگو سے بڑھ کر غم اذن گفتگو ہے

    وہی بات پوچھتے ہیں جو نہ کہہ سکوں دوبارہ

    کوئی اے شکیلؔ پوچھے یہ جنوں نہیں تو کیا ہے

    کہ اسی کے ہو گئے ہم جو نہ ہو سکا ہمارا

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    پیناز مسانی

    پیناز مسانی

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    مری زندگی ہے ظالم ترے غم سے آشکارا نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY