قیامت ہے شب وعدہ کا اتنا مختصر ہونا

یگانہ چنگیزی

قیامت ہے شب وعدہ کا اتنا مختصر ہونا

یگانہ چنگیزی

MORE BYیگانہ چنگیزی

    قیامت ہے شب وعدہ کا اتنا مختصر ہونا

    فلک کا شام سے دست و گریبان سحر ہونا

    شب تاریک نے پہلو دبایا روز روشن کا

    زہے قسمت مرے بالیں پہ تیرا جلوہ گر ہونا

    ہوائے تند سے کب تک لڑے گا شعلۂ سرکش

    عبث ہے خود نمائی کی ہوس میں جلوہ گر ہونا

    دیار بے خودی ہے اپنے حق میں گوشۂ راحت

    غنیمت ہے گھڑی بھر خواب غفلت میں بسر ہونا

    وہی ساقی وہی ساغر وہی شیشہ وہی بادہ

    مگر لازم نہیں ہر ایک پر یکساں اثر ہونا

    سنا کرتے تھے آج آنکھوں سے دیکھیں دیکھنے والے

    نگاہ یاسؔ کا سنگیں دلوں پر کارگر ہونا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے