قربتوں میں فاصلے کچھ اور ہیں

فاطمہ حسن

قربتوں میں فاصلے کچھ اور ہیں

فاطمہ حسن

MORE BYفاطمہ حسن

    قربتوں میں فاصلے کچھ اور ہیں

    خواہشوں کے زاویے کچھ اور ہیں

    سن رہے ہیں کان جو کہتے ہیں سب

    لوگ لیکن سوچتے کچھ اور ہیں

    رہبری اب شرط منزل کب رہی

    آؤ ڈھونڈیں راستے کچھ اور ہیں

    یہ تو اک بستی تھکے لوگوں کی ہے

    راہ میں جو لٹ گئے کچھ اور ہیں

    مل رہے ہیں گرچہ پہلے کی طرح

    وہ مگر اب چاہتے کچھ اور ہیں

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    فاطمہ حسن

    فاطمہ حسن

    مأخذ :
    • کتاب : siip-volume-47 (Pg. 251)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY