سر پر ہمارے سایۂ دیوار بھی نہیں

اتل اجنبی

سر پر ہمارے سایۂ دیوار بھی نہیں

اتل اجنبی

MORE BYاتل اجنبی

    سر پر ہمارے سایۂ دیوار بھی نہیں

    سورج سا ہم فقیروں کا گھر بار بھی نہیں

    مجھ سے تعلقات کا اقرار بھی نہیں

    اور کوئی پوچھتا ہے تو انکار بھی نہیں

    گہرائی اس ندی کی بھلا کیا پتا لگے

    جس میں بھنور نہیں کوئی منجھدار بھی نہیں

    جس کو تمام عمر عمل میں نہ لا سکے

    ایسی وہ رائے دینے کا حق دار بھی نہیں

    سانسوں کی ڈور تھامے چلی جا رہی ہے عمر

    ورنہ کسی سے کوئی سروکار بھی نہیں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY