aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

سوکھے ہونٹوں پر مرے حرف دعا ہوتے ہوئے

آصف بلال

سوکھے ہونٹوں پر مرے حرف دعا ہوتے ہوئے

آصف بلال

MORE BYآصف بلال

    سوکھے ہونٹوں پر مرے حرف دعا ہوتے ہوئے

    جنگ کیسے ہار جائیں حوصلہ ہوتے ہوئے

    ہو انا الحق کی صدا تو پیکر منصور ہو

    ہم نے دیکھا ہے یہاں بندہ خدا ہوتے ہوئے

    میں جھکاؤں سر سر مقتل خدا ایسا نہ ہو

    سامنے درس امام کربلا ہوتے ہوئے

    لاج رکھنا اس اٹھے دست دعا کی اے خدا

    کشتیاں کیوں ڈوب جائیں ناخدا ہوتے ہوئے

    میں سمندر ہی کی وسعت میں بھٹکتا رہ گیا

    ساحلوں کی ریت پر کچھ نقش پا ہوتے ہوئے

    کیا کہوں شوق جنوں میں چاک دامانی کا پھر

    راز افشا ہو گیا بند قبا ہوتے ہوئے

    جانے کیا تعبیر ہو اس خواب کی آصف بلالؔ

    اک سمندر دیکھتا ہوں سرخ سا ہوتے ہوئے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے