تیرے قریب آ کے بڑی الجھنوں میں ہوں

احمد فراز

تیرے قریب آ کے بڑی الجھنوں میں ہوں

احمد فراز

MORE BY احمد فراز

    تیرے قریب آ کے بڑی الجھنوں میں ہوں

    میں دشمنوں میں ہوں کہ ترے دوستوں میں ہوں

    مجھ سے گریز پا ہے تو ہر راستہ بدل

    میں سنگ راہ ہوں تو سبھی راستوں میں ہوں

    تو آ چکا ہے سطح پہ کب سے خبر نہیں

    بے درد میں ابھی انہیں گہرائیوں میں ہوں

    اے یار خوش دیار تجھے کیا خبر کہ میں

    کب سے اداسیوں کے گھنے جنگلوں میں ہوں

    تو لوٹ کر بھی اہل تمنا کو خوش نہیں

    یاں لٹ کے بھی وفا کے انہی قافلوں میں ہوں

    بدلا نہ میرے بعد بھی موضوع گفتگو

    میں جا چکا ہوں پھر بھی تری محفلوں میں ہوں

    مجھ سے بچھڑ کے تو بھی تو روئے گا عمر بھر

    یہ سوچ لے کہ میں بھی تری خواہشوں میں ہوں

    تو ہنس رہا ہے مجھ پہ مرا حال دیکھ کر

    اور پھر بھی میں شریک ترے قہقہوں میں ہوں

    خود ہی مثال لالۂ صحرا لہو لہو

    اور خود فرازؔ اپنے تماشائیوں میں ہوں

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    شکیلہ خراسانی

    شکیلہ خراسانی

    لتا ٹنڈن

    لتا ٹنڈن

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    تیرے قریب آ کے بڑی الجھنوں میں ہوں نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY