تھم گئی وقت کی رفتار ترے کوچے میں

اعجاز گل

تھم گئی وقت کی رفتار ترے کوچے میں

اعجاز گل

MORE BYاعجاز گل

    تھم گئی وقت کی رفتار ترے کوچے میں

    ایسے ثابت ہوا سیار ترے کوچے میں

    منظر بام سر دید نہیں کھلتا ہے

    کچھ ہے نا دیدہ کا اسرار ترے کوچے میں

    ہر طلب گار کو ہے حاصل گفتار سکوت

    نہ ہے انکار نہ اقرار ترے کوچے میں

    آئینہ شام کا روشن رخ مہتاب سے کر

    عکس چمکے تو ہو دیدار ترے کوچے میں

    وصلت کار بہم ہو کہ ہیں جمع دن رات

    پیشۂ ہجر کے بے کار ترے کوچے میں

    نفع کے کھیل میں سمجھا گیا تھا طاق جسے

    وہ خسارے میں ہے ہشیار ترے کوچے میں

    آخر عمر نے کی رونق بازار تمام

    نہ دکاں ہے نہ خریدار ترے کوچے میں

    ایک مدت سے ہے ترتیب میں بے ترتیبی

    نہ درستی کے ہیں آثار ترے کوچے میں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY