ادھر تو شہر کے گنجے میری تلاش میں ہیں

پاگل عادل آبادی

ادھر تو شہر کے گنجے میری تلاش میں ہیں

پاگل عادل آبادی

MORE BYپاگل عادل آبادی

    ادھر تو شہر کے گنجے میری تلاش میں ہیں

    ادھر تمام لفنگے مری تلاش میں ہیں

    میں ان کا مال غبن کرکے جب سے بیٹھا ہوں

    یتیم خانے کے لونڈے مری تلاش میں ہیں

    ملا ہے نسخہ جوانی پلٹ کا جب سے مجھے

    تمہارے شہر کے بڈھے مری تلاش میں ہیں

    میں جن کے واسطے جوتے چرا کے جیل گیا

    وہ لے کے ہاتھ میں جوتے مری تلاش میں ہیں

    دیا ہے نام کفن چور جب سے تم نے مجھے

    پرانی قبروں کے مردے مری تلاش میں ہیں

    پتے کی بات جو منہ سے نکل گئی پاگلؔ

    تمام شہر کے پگلے مری تلاش میں ہیں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY